بشو گلابی گیند سے پاکستان کو قابو کرنے کیلئے پرعزم

10 October 2016

شارجہ: ویسٹ انڈیز کرکٹ ٹیم کے لیگ اسپنر دیوندرا بشو کا کہنا ہے گلابی رنگ کی گیند سے کھیلنے کا منفرد استعمال سے پاکستانی بلے بازوں کو مشکلات پیدا کرنے میں آسانی ہوگی۔

پاکستان اور ویسٹ انڈیز کی ٹیمیں 13 اکتوبر کودبئی میں ڈے اینڈ نائٹ ٹیسٹ میں مدمقابل ہوں گی جو ایشیا میں کھیلا جانے والا پہلا ڈے اینڈ نائٹ ٹیسٹ میچ ہوگا۔

ڈان اخبار کی رپورٹ کے مطابق بشو نے پاکستان کرکٹ بورڈ پیٹرنز الیون کے خلاف تین روزہ ڈے اینڈ نائٹ میچ میں 36 اوورز میں 107 رنز دے کر 5 وکٹیں حاصل کی تھیں اور اب وہ پاکستان کے تجربہ کار بلے بازوں یونس خان، مصباح الحق، اظہرعلی اور اسد شفیق کو آوٹ کرنے کے خواہاں ہیں۔

بشو کا کہنا تھا کہ ‘مجھے بلے بازوں کے تاثرات ملے ہیں جہاں انھیں کھیلنے میں مشکل پیش آرہی ہے’۔

ان کا کہنا تھا کہ ‘یہاں پر گیند اسپن نہیں ہورہی تھی کیونکہ پچ سلو تھی اسی لیے تیز گیند کرنا پڑرہی تھیں لیکن گیند کا رنگ اتر گیا تھا اور یہ سفید یا سرخ گیند سے مختلف نہیں تھی’۔

پاکستان کے خلاف ٹیسٹ سیریز میں بشو ویسٹ انڈیز کی اسپین باولنگ میں اہم باولرہوں گے جس میں روسٹن چیز اور جیروم ویریکن بھی شامل ہیں۔

30 سالہ لیگ اسپنر کا کہنا تھا کہ ‘پاکستان، ہندوستان اور سری لنکا میں بلے باز اچھے ہیں اور بحیثیت اسپنر صحیح جگہ باولنگ کرنا پڑتی ہے اور میں ایسا کرنے کو تیار ہوں کیونکہ اگر آپ اچھی اسپن کریں گے تو اس کا انعام بھی ملے گا’۔

2011 میں پاکستان کے خلاف ٹیسٹ کیریئر کا آغاز کرنے والے بشو کا کہنا ہے کہ ‘میں ایک اچھی سیریز کے لیے پرعزم ہوں’۔

یاد رہے بشو نے مصباح الحق کو آوٹ کرکے ٹیسٹ میں اپنی پہلی وکٹ حاصل کی تھی۔

انھوں نے ٹیسٹ سیریز میں ویسٹ انڈین ٹیم کی جانب سے اچھی کارکردگی اور بہتر نتائج کی امید ظاہر کی۔

ویسٹ انڈیز کو پہلے ٹی ٹوئنٹی اور بعد ازاں ایک روزہ سیریز میں وائٹ واش کا سامنا کرنا پڑا تھا۔

بشو کا کہنا تھا کہ ‘مختصرطرز میچز مختلف تھے، وہ مشکل وقت میں تھے اور وہ میرے ذہن میں نہیں ہیں تاہم ٹیسٹ مختلف ہوں گے’۔

پاکستان اور ویسٹ انڈیز کے درمیان دوسرا ٹیسٹ 21 اکتوبر سے 25 اکتوبر تک ابوظہبی اور تیسرا ٹیسٹ 30 اکتوبر سے 3 نومبر تک شارجہ میں کھیلا جائے گا۔

Source. Dawn News

Leave a Reply

Be the First to Comment!


wpDiscuz