پی ایس ایل میں چھٹی ٹیم کا منصوبہ مسترد

18 May 2016

کراچی: پاکستان سپرلیگ (پی ایس ایل) کی فرنچائزوں کے مالکان نے لیگ میں چھٹی ٹیم کے اضافے کے منصوبے کو مسترد کردیا۔

ذرائع کے مطابق پی ایس ایل کے چیئرمین نجم سیٹھی کی جانب سے اگلے سال لیگ کے نئے سیزن میں ایک ٹیم کے اضافے کے وعدے کے باوجود فرنچائز مالکان نے اس منصوبے کو حتمی شکل دینے سے انکار کردیا۔

فرنچائز مالکان مرچنڈائزنگ کے ذریعے آمدنی کا نیا سلسلہ شروع کرنے کا ارادہ رکھتے ہیں اور انھیں اس بات پر تشویش ہے کہ ایک اضافی فرنچائز سے ان کے منافعے میں کمی ہوگی۔

پی ایس ایل کے چیئرمین نجم سیٹھی نے فرنچائز پر مشتمل ٹورنامنٹ کے اگلے سیزن میں مزید ایک ٹیم کی شمولیت کی خواہش کا اظہار کیا تھا تاہم سوائے پشاور زلمی کے کسی اور فرنچائز مالک نے منافعے کی تقسیم کے طریقہ کار کی وجہ سے اس خیال کو خوش آمدید نہیں کہا۔

قبل ازیں نجم سیٹھی نے کہا تھا کہ پی ایس ایل کی چھٹی ٹیم آذاد جموں اینڈ کشمیر (اے جے کے) کے نام سے ہوگی۔

معاہدے کی بنیاد پر قائم فرنچائزز

پاکستان کرکٹ بورڈ اور فرنچائز کے درمیان طے شدہ معاہدے کے مطابق ایک اور فرنچائز کا اضافہ تیسرے ایڈیشن میں ہوگا۔ پی ایس ایل میں اس وقت چاروں صوبوں اور وفاق پر مشتمل پانچ فرنچائز شامل ہیں۔

پی ایس ایل کا پہلا کامیاب ایڈیشن رواں سال فروری کے آغاز میں منعقد ہوا تھا اور پی سی بی نے 2.47 ملین ڈالر منافع حاصل کیا تھا اور بورڈ نے اس منافعے کے 70 فی صد حصے کو پانچوں فرنچائزوں میں برابرتقسیم کیا تھا۔

Source. Dawn News

Leave a Reply

Be the First to Comment!


wpDiscuz