دورہ انگلینڈ، ٹریننگ کیمپ کیلئے 35 ناموں کا اعلان، حفیظ، شہزاد، عمر اکمل اور آفریدی باہر، ڈسپلن پر کوئی کمپرومائز نہیں ہو گا: چیف سلیکٹر

2 May 2016

لاہور (مانیٹرنگ ڈیسک) پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) کے چیف سلیکٹر انضمام الحق نے دورہ انگلینڈ کیلئے قومی ٹیم اور اے ٹیم کے ناموں کا اعلان کر دیا ہے جن میں محمد حفیظ، احمد شہزاد، شاہد آفریدی اور عمر اکمل کے نام شامل نہیں ہیں جبکہ محمد حفیظ، شرجیل خان سمیت منتخب کئے گئے متعدد کھلاڑیوں کی ٹیم میں حتمی شمولیت بھی فٹنس سے مشروط کر دی گئی ہے۔ چیف سلیکٹر انضمام الحق کا کہنا ہے کہ سلیکشن کمیٹی آزاد ہے اور اپنے فیصلے خود کرے گی، ڈسپلن پر کوئی کمپرومائز نہیں کیا جائے گا۔
چیف سلیکٹر انضمام الحق نے پریس کانفرنس کے دوران ناموں کا اعلان کیا اور بتایا کہ دورہ انگلینڈ سے پہلے ٹریننگ کیمپ میں شمولیت کیلئے اظہر علی، شرجیل خان، خرم منظور، شان مسعود، یونس خان، مصباح الحق، اسد شفیق، شعیب ملک، بابر اعظم، حارث سہیل کو منتخب کیا گیا ہے اور ان کی شمولیت فٹنس کے ساتھ مشروط کی گئی ہے۔ مڈل آرڈرز میں خالد لطیف، فواد عالم، عبدالرحمان، اور آصف ذاکر کو منتخب کیا گیا ہے جبکہ آل راﺅنڈز میں انور علی، بلاول بھٹی اور فاسٹ باﺅلرز میں محمدعامر، راحت علی، عمران خان، سہیل خان، وہاب ریاض، جنید خان اورحسن علی کو منتخب کیا گیا ہے۔ انضمام الحق کے مطابق وکٹ کیپرز میں سرفراز احمد، محمد رضوان اور عدنان اکمل کو منتخب کیا گیا ہے جبکہ سپنرز میں یاسر شاہ، ذوالفقار بابر، محمد اصغر، عماد وسیم، بلال آصف اور ذوہیب خان منتخب ہوئے ہیں۔
انضمام الحق نے اس موقع پر اے ٹیم کیلئے منتخب کردہ ناموں کا اعلان بھی کیا جن میں بلے باز فہد زمان، جان علی، محمد وقاص، زین عباس، اسراراللہ مڈل آرڈر میں عمر امین، مزمل، سعود شکیل، عابد علی اور عمر صدیق شامل ہیں ان کی ٹیم میں شمولیت کو بھی فٹنس کیساتھ مشروط قرار دیا گیا ہے۔ آل راﺅنڈرز میں محمد نواز، طیب اشرف اور عامر یامین ہیں جبکہ فاسٹ باﺅلرز میں محمد عباس، عزیز اللہ، میر حمزہ، احمد جمال، عماد بٹ اور ضیاءالحق، وکٹ کیپنگ کیلئے سیف اللہ بنگش، محمد حسن اور سپنرز میں اسامہ میر، شاداب خان، عبیداللہ اور ظفر گوہر کو منتخب کیا گیا ہے۔
انضمام الحق کا کہنا تھا کہ 30 سال سے بڑی عمر کا کوئی لڑکا اے ٹیم میں شامل نہیں ہو گا جبکہ اے ٹیم کے ساتھ چار سے پانچ ٹور کرنے والا لڑکا بھی شامل نہیں ہو گا ۔ انہوں نے مزید کہا کہ ٹیم ڈسپلن میں کوئی کمپرومائز نہیں کیا جائے گا اور نئے لڑکوں کو بھی موقع فراہم کیا جائے گا۔ انہوں نے مزید کہا کہ ٹیم میں ڈسپلن ہونا چاہئے اس کا خاص خیال رکھا جائے گا، احمد شہزاد اور عمر اکمل کا ڈسپلن اچھا تھا نہ کارکردگی، ان کا ریکارڈ دیکھ کر ہی انہیں شامل نہ کرنے کا فیصلہ کیا گیا۔ محمد حفیظ اور عماد وسیم دوڑنے کے قابل نہیں ہیں، جو لڑکا اچھی پرفارمنس دے گا اس کے نام پر ضرور غور کیا جائے گا۔ کیا جائے گا
شاہد آفریدی سے متعلق سوال کے جواب میں انضمام الحق نے کہا کہ پاکستانی ٹیم نے اس سال صرف 2 ٹی 20 میچ کھیلنے ہیں جبکہ 14 ماہ میں صرف 6 ٹی 20 میچ ہیں اس لئے شاہد آفریدی کے بجائے نئے لڑکوں کو موقع دینا چاہئے۔ چیف سلیکٹر نے کہا کہ سلیکشن کمیٹی مکمل طور پر آزاد ہے ، بورڈ ہمیں گائیڈ کر سکتا ہے لیکن اپنے فیصلے خود کریں گے

Source. Daily Pakistan

Leave a Reply

Be the First to Comment!


wpDiscuz