تاجروں کو پھر سے بھتے کی پرچیاں ملنے لگیں، گارڈن میں احتجاج

05 October 2016

کراچی (ویب ڈیسک) تاجروں کو پھر سے بھتے کی پرچیاں ملنے لگیں، جس کے باعث تاجر برادری سراپا احتجاج ہے۔ منگل کے روز گارڈن میں بھرتی خوری کے خلاف دکاندار سڑکوں پر نکل آئے اور چڑیا گھر کے سامنے سڑک کو بلاک کرکے مظاہرہ شروع کردیا، جس کے نتیجے میں سڑک پر ٹریفک کی روانی معطل ہوگئی اور اطراف کی سڑکوں پر بدترین ٹریفک جام ہوگیا۔

روزنامہ امت کے مطابق دکانداروں کا کہنا تھا کہ بھتہ خوری کئی برسوں سے جاری ہے اور گزشتہ چند روز کے دوران درجنوں تاجروں کو بھتے کی پرچیاں بھی بھیجی گئی ہیں۔ احتجاج کی اطلاع ملتے ہی پولیس اور رینجرز کے افسران موقع پر پہنچ گئے اور مظاہرین کو یقین دہانی کرائی کہ انہیں تحفظ فراہم کیا جائے گا، جبکہ بھتی خوروں کے خلاف بھی بھرپور کارروائی کی جائے گی۔ اس یقین دہانی پر مظاہرین پرامن طور پر منتشر ہوگئے، جس کے بعد سڑک کو ٹریفک کے لئے کھول دیا گیا۔ شہر کے مختلف علاقوں گارڈن سمیت اولڈ سٹی ایریا، شہر کے سب سے اہم تجارتی مرکز بولٹن مارکیٹ، لیاری، سائٹ، ناظم آباد، اورنگی ٹاﺅن، بدلیہ ٹاﺅن، نارتھ کراچی، گلبہار، ملیر، منظور کالونی، کورنگی، لانڈھی سمیت دیگر علاقوں میں مسلح گروپوں کی جانب سے تاجروں اور صاحب حیثیت لوگوں کو بھتے کی رقم کیلئے پرچیاں بھیجنے کا سلسلہ ایک بار پھر زور پکڑگیا ہے ۔

اس بات کی تصدیق گارڈن کے علاقے میں تاجروں کی جانب سے کیا جانے والا احتجاج ہے۔ گزشتہ روز کھوکھراپار کے علاقے میں موٹرسائیکل سوار ملزمان کی فائرنگ سے جاں بحق ہونےو الے تاجر کے قتل کے حوالے سے پولیس کا کہنا ہے کہ ابتدائی تفتیش میں معاملہ بھتے کا تنازع معلوم ہوتا ہے۔

Source. Daily Pakistan

Leave a Reply

Be the First to Comment!


wpDiscuz