پرویز رشید کیلئے مڈل سیکس یونیورسٹی کا نام 'حرام

2 May 2016

سوشل میڈیا پر شیئر کی جانے والی ایک ویڈیو میں یہ بات سامنے آئی ہے کہ وفاقی وزیراطلاعات پرویز رشید پاکستان تحریک انصاف کے سربراہ عمران خان کے بچوں کی یونیورسٹی کی وجہ سے ایک ‘انتہائی سنجیدہ اور سنگین نوعیت’ کے مسئلے سے دوچار ہیں۔

پرویز رشید نے عمران خان کے بچوں کی یونیورسٹی کے بارے میں بات کرتے ہوئے کہا کہ ‘جہاں پرعمران خان کے بچے پل رہے ہیں صرف اس ایریا کا نام لے لیں۔۔۔میں اس ایریا کا نام نہیں لوں گا کیونکہ مسلمان کی زبان پہ  وہ نام آ جائے تو وضو کرنا پڑتا ہے۔۔۔ لیکن خان صاحب سے پوچھیے گا کہ اس ایریا کا نام کیا ہے، خان صاحب اگر اس ایریا کا نام بتا دیں تو انہیں بھی وضو کرنا پڑ جائے گا۔۔۔اگر وہ وضو کرنے پہ یقین رکھتے ہیں۔’

یہاں پرویز رشید ‘مڈل سیکس یونیورسٹی’ کا ذکر کر رہے تھا جو کہ لندن کے شمال میں واقع ہے۔

اور اس کا نام نہ لینے کی وجہ صرف اور صرف یہ ہے کہ اس میں ‘سیکس’ کا ذکر آتا ہے۔

پاکستان میں اگرچہ ‘سیکس’ پر گفتگو کو حرام سمجھا جاتا ہے مگر ایسی کوئی مثال نہیں ملتی کہ اگر کسی جگہ کے نام کے ساتھ سیکس لکھا ہوتو اسے پکارنے کی ممانعت ہو۔

Source. Dawn News

Leave a Reply

Be the First to Comment!


wpDiscuz