بڑی خبر آگئی، پاکستانی پاسپورٹ میں آنے والی ہے اہم ترین تبدیلی، بڑا مسئلہ حل ہوجائے گا

17 May 2016

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) پاسپورٹ بنوانا ہو یا اس کی تجدید کروانا ہو، یہ کوئی آسان کام نہیں، اور اس اہم دستاویز کا ناجائز استعمال اور اس کے زریعے کئے جانے والا فراڈ بھی انتہائی سنگین مسئلہ ہے۔ حکومت پاکستان نے ان تمام مسائل کا تدارک کرنے کے لئے ایک اہم قدم اٹھا لیا ہے، جس کے تحت عوام کو بائیو میٹرک ای پاسپورٹ جاری کئے جائیں گے۔

ویب سائٹ پروپاکستانی کی رپورٹ کے مطابق وزیر داخلہ چوہدری نثار علی خان کی جانب سے ای پاسپورٹ کے پراجیکٹ کی منظوری دے دی گئی ہے اور توقع کی جارہی ہے کہ 2017ءتک یہ پاسپورٹ دستیاب اور آپریشنل ہوگا۔ بائیومیٹرک ای پاسپورٹ پراجیکٹ کی منظوری وزیر داخلہ کی زیر صدارت منعقد ہونے والی ایک ہائی لیول میٹنگ میں دی گئی، جس میں سیکرٹری داخلہ، سپیشل سیکرٹری داخلہ، ڈی جی ایف آئی اے، ڈی جی امیگریشن اینڈ پاسپورٹ اور چیئرمین نادرا نے بھی شرکت کی۔

موجودہ پاسپورٹ میں شناخت کی تبدیلیاں کی جاسکتی ہیں اور جعلساز اسے فراڈ، انسانی سمگلنگ اور دہشت گردی جیسے جرائم کے لئے استعمال کرسکتے ہیں۔ نئے ای پاسپورٹ میں ایک الیکٹرونک چپ لگائی جائے گی جس میں پاسپورٹ کے مالک کا بائیومیٹرک ڈیٹا ہوگا۔ اس پاسپورٹ کی الیکٹرانک چیکنگ اور مانیٹرنگ ہوسکے گی، لہٰذا جعلسازی اور فراڈ کا خدشہ ختم ہوجائے گا۔ اس پاسپورٹ کی ایک اور بڑی سہولت یہ ہوگی کہ مستقبل میں اس کا ڈیٹا باآسانی اب ڈیٹ ہوسکے گا اور اس کے لئے شہریوں کو سرکاری دفاتر کے چکر لگانے اور طویل انتظار کی زحمت نہیں اٹھانی پڑے گی۔ پاسپورٹ کی تیاری مکمل طور پر ملک میں موجود جدید مشینوں پر کی جائے گی اور یوں یہ مکمل طور پر محفوظ ہوگا اور اس کی ڈیٹا کی ہیکنگ کا خدشہ بھی نہیں ہوگا۔

Source. Daily Pakistan

Leave a Reply

Be the First to Comment!


wpDiscuz