سوشل ميڈيا پر اينکرپرسن کا جعلی اکاؤنٹ بناکر فحش مواد اپ لوڈ کرنے والے شخص کا جوڈيشل ريمانڈ، اڈيالہ جيل بھيج ديا،

28 April 2016

سوشل ميڈيا پر شريف لوگوں کی پگڑی اچھالناعام ہوگيا ہے، جس سے دنيا بھر ميں عام لوگ پريشان ہيں. کسی کے بھی بدن پر کوئی چہرا لگا کر کسی کے ساتھ دکھا ديا جا سکتا ہے، پاکستان ميں اس کے تدارک کے لئے کو‏ئی قانون نہ ہونے کی وجہ سے شريف لوگوں کی پگڑياں اچھالنے والے ايسے لوگوں کو کھلی چھوٹ ملی ہوئی ہے. اس طرح سوشل ميڈيا پر غلاظت پھيلائی جا رہی ہے

لوگوں کی شکليں بدل کر اور جس کے ساتھ چاہيں تصاوير جوڑ کرسوشل ميڈيا پر ڈال دی جاتی ہے، ايسی صورتحال ميں ايف آئی اے کے سائبر کرائم ونگ کا يہ اقدام قابل تعريف ہے کہ اس نے جعلی اکاؤنٹ کے ذريعے سوشل ميڈيا پر فحش مواد ڈالنے والے ايک شخص کو پکڑ کر عدالت ميں پيش کر ديا، سينئر سول جج عبدلغفور کاکڑ نے نجی ٹی وی چينل کی اينکر پرسن ناديہ خان کا جعلی اکاؤنٹ بنا کر فحش مواد اپ لوڈ کرنے والے ہيکرعاصم خان سکندر کو 14 روزہ جوڈيشل ريمانڈ پر اڈيالہ جيل بھيج ديا

گزشتہ روز ايف آئی اے کے سائبر کرائم ونگ نے چار روزہ ريمانڈ مکمل ہونے پر ملزم کو سينئر سول جج کی عدالت کے روبرو پيش کيا تھا، واضح رہے کہ ايف آ‏ئی اے کے مطابق ملزم نے ناديہ خان کا سوشل ميڈيا پر جعلی اکاؤنٹ بنا کر فحش مواد اپ لوڈ کيا، جس کے بعد اس نے ناديا خان کے گھر ميں خطوط کے ذريعے بليک ميلنگ بھی شروع کردی، ملزم پر اينکر پرسن کے والد کرنل ر اسلم خان کو بھی بد نام کرنے کا الزام ہے

Source . Jang News

Leave a Reply

Be the First to Comment!


wpDiscuz