پاکستان میں مردوں کے مقابلے میں عورتوں کی تعداد کم ہو گئی

12 August 2016

اسلام آباد (ویب ڈیسک)پاکستان میں مردوں کے مقابلے میں عورتوں کی تعداد کم ہو گئی ,وفاقی دارالحکومت سمیت چاروں صوبوں پنجاب، سندھ، خیبر پختونخوا ،بلوچستان، فاٹا میں بھی مردوں کی تعداد عورتوں سے زائد ہے

روزنامہ دنیا کے مطابق  20سال قبل پاکستان میں عورتوں کی تعداد مردوں کے مقابلے میں زیادہ تھی تاہم پاکستان نیشنل انسٹیٹیوٹ آف پاپولیشن سٹڈیز کی جانب سے پاکستان کی آبادی میں اضا فے کی سالانہ شرح کے مطابق یکم جولائی2016کو پاکستان کی آبادی19کروڑ39لاکھ99ہزار28نفوس تک پہنچ گئی ہے اور1998کی مردم شماری کے نتائج میں ملک کی آبادی 13کروڑ23لاکھ51ہزار279نفوس پر مشتمل تھی اس طرح 17سا ل کے دوران پاکستان کی آبادی میں6کروڑ15لاکھ67ہزار694افراد کا اضافہ ہوا

 وفاقی دارالحکومت کی مجموعی آبادی11لاکھ79ہزار814افراد پر مشتمل ہے جس میں6لاکھ36ہزار238مرد جبکہ5لاکھ43ہزار576 عورتیں شامل ہیں ،مجموعی آبادی میں مردوں کی تعداد 10کروڑ9لاکھ12ہزار356ہے جبکہ عورتوں کی تعداد 9 کروڑ 30 لاکھ 7 ہزار 573بتائی گئی ہے

خیبر پختونخوا کی مجموعی آبادی2کروڑ59لاکھ97ہزار636افراد پر مشتمل ہے جس میں1 کروڑ33 لاکھ16 ہزار928 مرد جبکہ عورتوں کی تعداد 1کروڑ26لاکھ80ہزار708 بتائی گئی ہے

فاٹا کی مجموعی آبادی46لاکھ53ہزار897ہے جس میں24لاکھ 20ہزار546مرد اور22لاکھ33ہزار351 عورتیں ہیں

پنجاب کی مجموعی آبادی10کروڑ78لاکھ68ہزار 451افراد پر مشتمل ہے جس میں5کروڑ58لاکھ15ہزار، 109مرد جبکہ5کروڑ20لاکھ53ہزار341عورتیں شامل ہیں سندھ کی مجموعی آبادی4کروڑ 45لاکھ99ہزار926افراد پر مشتمل ہے جس میں 2کروڑ35لاکھ85ہزار 870مرد جبکہ2کروڑ10لاکھ14ہزار054 خواتین ہیں

بلوچستان کی مجموعی آبادی96لاکھ20ہزار204 افراد پر مشتمل ہے جس میں51لاکھ37ہزار663مرد جبکہ 44لاکھ 82ہزار 541 عورتیں شامل ہیں۔

Source. Daily Pakistan

Leave a Reply

Be the First to Comment!


wpDiscuz