کابل: غیر ملکیوں کے گیسٹ ہاؤس پر طالبان کا ٹرک بم حملہ

1 August 2016

کابل: افغانستان کے دارالحکومت کابل میں غیر ملکیوں کے ایک گیسٹ ہاؤس کے قریب طالبان کے ٹرک بم حملے کے نتیجے میں ایک سیکیورٹی اہلکار ہلاک ہوگیا۔

خبر رساں ادارے اے ایف پی کے مطابق بارود سے بھرے ہوئے ٹرک کو گیسٹ ہاؤس کی دیوار سے ٹکرانے کے نتیجے میں ہونے والا دھماکا اتنا زوردار تھا کہ اس کی آوازیں دور دور تک سنی گئیں۔


اب تک کی اطلاعات کے مطابق

ٹرک بم کو لگژری گیسٹ ہاؤس کی دیوار سے ٹکرایا گیا

ایک سیکیورٹی اہلکار ہلاک ہوا

طالبان نے واقعے کی ذمہ داری قبول کرلی

گیسٹ ہاؤس کا عملہ اور مہمان محفوظ رہے، افغان میڈیا


کابل کے پولیس چیف عبدالرحمٰن رحیمی نے اے ایف پی کو بتایا کہ بارود سے بھرے ہوئے ایک ٹرک کو گیسٹ ہاؤس کی دیوار سے ٹکرایا گیا۔

انھوں نے بتایا کہ بعدازاں حملہ آور غیر ملکی فورسز کے کمپاؤنڈ میں داخل ہوگئے تاہم افغان اسپیشل فورسز نے کمپاؤنڈ میں داخل ہوکر 2 حملہ آوروں کو ہلاک کردیا۔

پولیس چیف کے مطابق واقعے میں ایک پولیس اہلکار بھی ہلاک ہوا جبکہ دیگر 3 زخمی ہوگئے۔

رحیمی نے حملہ آوروں کی تعداد کے حوالے سے کچھ نہیں بتایا، تاہم ان کا کہنا تھا کہ کلیئرنس آپریشن جاری ہے۔

افغان ٹی وی چینل طلوع نیوز نے ذرائع کے حوالے سے بتایا کہ حملے کے نتیجے میں گیسٹ ہاؤس کا عملہ اور مہمان محفوظ رہے، جبکہ ہوٹل کے گیٹ پر تعینات گارڈز سے مدد طلب کرنے والے 2 طالبان حملہ آوروں نے خود کو دھماکے سے اڑا لیا اور ہلاک ہوگئے۔

طلوع کے مطابق جس وقت حملہ ہوا، اس وقت گیسٹ ہاؤس میں 11 غیر ملکی، عملے کے 9 ارکان اور 26 گارڈز موجود تھے۔

دوسری جانب طالبان ترجمان ذبیح اللہ مجاہد نے اپنے ایک بیان میں واقعے کی ذمہ داری قبول کرتے ہوئے کہا کہ ٹرک بم حملے کے بعد حملہ آو راکٹ، گرنیڈز اور دیگر ہتھیاروں سے لیس ہوکر کمپاؤنڈ میں داخل ہوگئے۔

Source. Dawn News

Leave a Reply

Be the First to Comment!


wpDiscuz